بر ظرف ہونے والا مولانا صلاح الدین کا انٹر ویو سامنے آئے گا یا نہیں ؟؟

طالبات کو جنسی طور پر ہراساں کرنے والے گومل یونیورسٹی شعبہ اسلامیات کے سربراہ مولانا صلاح    الدین گرفتار



ڈیرہ اسماعیل خان ( نیوز ) ایف آئی اے ساٸبر کراٸم ونگ کی کاررواٸی جنسی سکینڈل میں ملوث شعبہ اسلامیات گومل یونیورسٹی ڈیرہ اسماعیل خان کے چٸیرمین صلاح الدین گرفتار۔  اطلاعات کے مطابق مولانا صلاح الدین پر متعدد طالبات نے الزام لگایا تھا کہ وہ امتحانی پرچوں میں نمبر بڑھانے کےلیے نجی فارم ہاوس پر بلاتے اور جنسی طور پر ہراساں کرتے تھے یونیورسٹی انتظامیہ ایک عرصہ سے اس کیس کو دبانے کی کوشش کررہی تھی جس کے بعد کچھ متاثرہ طالبات نے ثبوتوں کے ساتھ ایف آئی اے سائبر کرائم ونگ کو درخواستیں دے دیں ایف آئی اے کی تحقیقات کے بعد ان کی گرفتاری کا فیصلہ ہوا جس پر آج عملدرامد کرلیا گیا ۔ یہ بھی اطلاع ہے مولانا صلاح الدین کی گرفتاری کے وقت ایک نجی چینل کی ٹیم بھی موجود تھی چینل کی ٹیم کا موقف تھا کہ انہیں متعدد طالبات اور والدین نے 
درخواستیں دی تھیں


ادھر گومل یونیورسٹی کے وائس چانسلر نے مولانا صلاح الدین کو برطرف کردیا 
ہے

ویڈیو لنک میں موجود ہے، 


آپ کو جواب کومنیٹس میں ضرور کریں۔







آب سوال یہ ہے کہ یہ ویڈیو میڈیا پر آئے گی یا نہیں؟ 
کئی زریعہ سے یہ بھی معلوم ہوا ہے کی روکنے کی بھر پور کوشش کی جا رہی ہے؟



Post a Comment

0 Comments